Abbas Mera Margaya Zainab Nawha lyrics

Abbas Mera Margaya Zainab Nawha lyrics

Abbas Mera Margaya Zainab Nawha lyrics

Abbas Mera Margaya Zainab Nawha Lyrics

 

Shayar: Anees Pehersari
Nohaqan: Ali Zia Rizvi

Abbas Mera Margaya Zainab Nawha Lyrics in English



Abbas mera margaya Zainab Zainab
Shabbir dete thay sada Zainab Zainab

Barpa karo behna aza, bhai huwa hum se juda,
hum hogaye be-aasra, kohe musibat gir pada, Zainab
Abbas mera margaya Zainab Zainab

bazoo huwe uske qalam, kaisa huwa hai ye sitam
tanha howe ghurbath may hum, matam karo zere alam, Zainab
Abbas mera margaya Zainab Zainab

aata alam ko dekh kar, poocha chacha ko tha magar,
dar par hai unki munthazer, usko na ho iski khabar, Zainab 
Abbas mera margaya Zainab Zainab
maare gaye uske chacha, maloom usko gar huwa
bali Sakina bebaha, peetegi sar karke buka, Zainab
Abbas mera margaya Zainab Zainab

Akbar se ay behna kaho, jaakar chachi ko pursa do
poochay hame ghamkhar jo, kehde hai matam may wo, Zainab
Abbas mera margaya Zainab Zainab

tanha hame ab jaankar, kya kuch karangay ahle shar
barbaaad hoga ghar ka ghar, kat jayega ab mera sar, Zainab
Abbas mera margaya Zainab Zainab

karlo anees is dam buka, aajaye jaane kab khaza
kya waqt aisa aagaya, rone pa ho zulmo jafa, Zainab
Abbas mera margaya Zainab Zainab.

Abbas Mera Margaya Zainab Nawha lyrics in Urdu


عباس میرا مر گیا زینب زینب

شبیر دیتے تھے صدا زینب زینب

برپا کرو بہن عزا بھائی ہوا ہم سے جدا

ہم ہو گئے ہیں بے آسرا کوہ مصیبت گر پڑا زینب

عباس میرا مر گیا

بازو ہوئے اس کے قلم کیسا ہوا ہے یہ ستم

تنہا ہوئے غربت میں ہم ماتم کرو زیر علم زینب

عباس میرا مر گیا

آتا علم کو دیکھ کر پوچھا چچا کو تھا مگر
در پر ہوئی ان کی منتظر اس کو نہ ہو اس کی خبر زینب
عباس میرا مر گیا

مر گئے اس کے چچا معلوم اس کو گر ہوا

بالی سکینہ بے بہا پیٹے گی سر کر کے بکا زینب

عباس میرا مر گیا

اکبر سے اے بہنا کہو جا کر چچی کو پرسہ دو

پوچھے ہمیں غمخوار جو کہہ دو ہے ماتم میں وہ زینب

عباس میرا مر گیا

تنہا ہمیں اب جان کر کیا کچھ کریں گے اہل شر

برباد ہو گا گھر کا گھر کٹ جائے گا اب میرا سر زینب

عباس میرا مر گیا

کر لو انیس اس دم بکا آجائے جانے کب قضا

کیا وقت ایسا آگیا رونے پہ ہو ظلم و جفا زینب

عباس میرا مر گیا
 

Post a comment

0 Comments